12

ملکی صورتحال میں ہمارا فرض ہے کہ محنت کشوں کو سپورٹ کریں، سعید غنی

کراچی (نیوز ڈیسک) وزیر تعلیم و محنت سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ اس وقت ملکی صورتحال میں ہمارا فرض ہے کہ ہم مزدوروں اور محنت کشوں اور ڈیلی ویجز پر کام کرنے والوں کے خاندانوں کو مکمل سپورٹ کریں۔ مجھے ہزاروںکی تعداد میں لوگوں نے فون، میسیج اور دیگر ذرائع سے میری صحت کے لئے دعائیں کی ہیں میں ان تمام کا مشکور ہوں کہ ان کی ان دعائوں سے مجھے حوصلہ ملا ہے۔ میری تمام مخیر حضرات سے استدعا ہے کہ وہ حکومت سندھ کی جانب سے قائم کئے گئے کرونا وائرس ایمرجنسی فنڈ میں بھرپور تعاون کریں۔ ان خیالات کا اظہار انہوںنے گذشتہ روز اپنے ٹوئیٹر پیغام کے ذریعے کیا۔ سعید غنی نے کہا کہ الحمد اللہ میری صحت بہت بہتر ہے تاہم میں کرونا وائرس کے مثبت ٹیسٹ آنے کے بعد مکمل آئشولیشن میں ہوں لیکن میں اپنے گھر سے بیٹھ کر جو کچھ ممکن ہے وہ کام کررہا ہوں۔ انہوںنے کہا کہ ان دو سے تین دنوں کے درمیان ہزاروں کی تعداد میں میرے چاہنے والوں، دوستوں، عزیزوں اور دیگر کے فون اور میسیج مجھے ملیں ہیں اور انہوں نے میری جلد صحتیابی کے لئے دعا کی ہے، میں ان تمام کا تہہ دل سے مشکور ہوں کیونکہ ان کی ان دعائوں سے مجھے مزید حوصلہ ملا ہے۔ سعید غنی نے کہا کہ اس وقت پوری دنیا کرونا وائرس کی وبا سے لڑ رہی ہے اور پاکستان میں سندھ حکومت نے اس لڑائی کا آغاز پہلے روز سے ہی کیا ہے اور آج بھی ہم بھرپور حوصلے کے ساتھ میدان عمل میں ہیں۔ سعید غنی نے کہا کہ اس وقت جب پورے صوبے میں لاک ڈائون ہے ہمیں اپنے ان محنت کش بھائیوں اور ان کے خاندانوںکے ساتھ کھڑا رہنا ہے، جو روزانہ کی بنیاد پر کما کر اپنے بچوں کا پیٹ پال رہے ہیں۔ انہوںنے کہا کہ اس سلسلے میں سندھ حکومت نے کرونا وائرس ایمرجنسی فنڈ قائم کیا ہوا ہے اور میری اپیل ہے کہ مخیر حضرات اس فنڈ میں زکواۃ اور ڈونیشن جمع کروائیں تاکہ ان ضرورت مندوں کی مالی معاونت کی جاسکے۔ سعید غنی نے کہا کہ سندھ بینک میں قائم اس فنڈ میں جس کا اکائونٹ نمبر A/c # 03015594456100 ہے اس میں زیادہ سے زیادہ امدادی رقوم جمع کروائی جائیں۔ انہوںنے کہا کہ یہ اکائونٹ کوئی وزیر یا پیپلز پارٹی یا کسی دیگر پارٹی کا کوئی رہنماء نہیں بلکہ اس اکائونٹ کو فیصل ایدھی، مشتاق چھاپرا اور ڈاکٹر عبدالباری جیسے سوشل ورکرز چلائیں گے اور اس میں کوئی حکومتی یا سیاسی فرد شامل نہیں ہے۔ انہوںنے کہا کہ سندھ حکومت کی جانب سے لاک ڈائون عوامی مفاد میں کیا گیا ہے تاکہ یہ وبا ایک دوسرے میں پھیلنے سے روکا جاسکے۔ سعید غنی نے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ زیادہ سے زیادہ اپنے گھروں میں رہیں اور بلا ضرورت گھروں سے نکلنے سے اجتناب کریں۔ انہوںنے کہا کہ اگر ہم سب نے مل کر حکومتی ایڈوائیزی پر عمل درآمد کرلیا تو انشاء اللہ ہم بہت جلد اس وبا سے چھٹکارا حاصل کرنے میں کامیاب ہوجائیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں