0

بجلی سے چلنے والی گاڑیاں بے حد سستی ، بڑی خبر آگئی

سین فرانسسکو(مانیٹرنگ ڈیسک)ماحول دوست الیکٹرک کاریں بنانے والی معروف کمپنی ٹیسلا کے ارب پتی بانی ایلن مسک نے دنیا کو موسمیاتی تبدیلیوں سے بچانے کے لیے ایک ایسا بے مثال قدم اٹھا لیا ہے کہ دنیا میں کم ہی کاروباری لوگ اس کی جرا¿ت کرتے ہیں۔ سی بی این نیوز کے مطابق ایلن مسک نے اعلان کر دیا ہے کہ اب کوئی بھی شخص یا کمپنی اچھی نیت کے ساتھ ان کی کمپنی ٹیسلا کی ٹیکنالوجی استعمال کر سکتی ہے اور الیکٹرک کاریں بنا کر فروخت کر سکتی ہے۔ وہ اس شخص یا کمپنی کے خلاف ’کاپی رائٹس‘ کا مقدمہ نہیں کریں گے۔

رپورٹ کے مطابق ایلن مسک کا یہ اقدام ایسی انڈسٹری میں ایک تاریخی اقدام ہے جہاں چھوٹی چھوٹی چیزیں اور اختراعی خیالات کاپی رائٹس کے تحت محفوظ کیے جاتے ہیں اور کوئی دوسرا انہیں استعمال نہیں کر سکتا۔ صرف اصل مالک ہی ان سے رقم کمانے کا حق رکھتا ہے۔ تاہم ایلن مسک نے ٹیسلا کی ٹیکنالوجی عام کرکے دوسروں کو اس کے ذریعے رقم کمانے کا موقع دے دیا ہے۔ اس سے یہ ہو گا کہ زیادہ سے زیادہ کمپنیاں ٹیسلا کی ٹیکنالوجی استعمال کرکے الیکٹرک کاریں بنائیں گی جس کے نتیجے میں دنیا میں آلودگی کم ہو گی اور ماحولیاتی تبدیلیوں پر قابو پایا جا سکے گا۔

یہ تاریخی اعلان کرتے ہوئے ایلن مسک کا کہنا تھا کہ ”ٹیسلا موٹرز بنانے کا مقصد ماحول دوستی اور سستی ٹرانسپورٹ کو عام کرنا تھا۔ اگر ہم اس مقصد پر کاربند ہونے کا دعویٰ کرتے ہیں اور ساتھ ہی انٹلیکچوئل پراپرٹی اور کاپی رائٹس کی بارودی سرنگیں بچھا دیتے ہیں تو ہم اپنے اس مقصد کے برعکس کام کر رہے ہوتے ہیں۔ ایسے میں منزل پر پہنچنا مشکل ہوتا ہے۔میں نے شروع میں سوچا کہ اپنی مصنوعات اور ٹیکنالوجی کو انٹلیکچوئل پراپرٹی رائٹس کے ذریعے محفوظ کر لوں تاکہ بڑی کارساز کمپنیاں ہماری ٹیکنالوجی کی نقل نہ کر سکیں اور مارکیٹ پر حاوی نہ ہو جائیں۔ تاہم بدقسمتی سے یہ فیصلہ کرکے ہم اپنے مقصد کے الٹ کام کر رہے تھے۔ جب تک ہم اپنی ٹیکنالوجی کو دوسروں کے لیے عام نہیں کریں گے تب تک یہ ٹیکنالوجی دنیا میں عام کیسے ہو گی اور اس کے ثمرات پوری دنیا تک کیسے پہنچ سکیں گے، چنانچہ اب اسی سوچ کے پیش نظر میں نے اپنی ٹیکنالوجی کو عام کرنے کا فیصلہ کیا ہے، تاکہ یہ ٹیکنالوجی تیزی سے عام ہو اور دنیا کو موسمیاتی تبدیلیوں سے بچایا جا سکے۔ اکیلی ٹیسلا سال میں 10کروڑ گاڑیاں بھی تیار کرتی رہے تو اس کے لیے دنیا کو درپیش ماحولیاتی تبدیلیوں کے خطرے سے نمٹنا ٹیسلا کے لیے ناممکن ہو گا۔“

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں