چین کے صدر مملکت کی مائکرونیشیا کے صدر سےملاقات

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک)13 دسمبر کو چین کے صدر مملکت شی چن پھنگ نے بیجنگ میں چین کا پہلی مرتبہ دورہ کرنے والے مائکرونیشیا کے صدر ڈیو ڈ پانیولو سے ملاقات کی ۔بات چیت کے دوران شی چن پھنگ نے چین کے ساتھ تعلقات کے فروغ اور ایک چین کے اصول پر قائم رہنے کے لئے صدر ڈیو ڈ پانیولو کی کوششوں کی تعریف کی۔ شی جن پھنگ نے نشاندہی کی کہ چین پرامن ترقی کی راہ پر گامزن ہے اور تمام بڑے چھوٹے ممالک کے ساتھ برابری کے سلوک رکھتا ہے ۔ اس کا ساتھ ساتھ چین یک طرفہ پسندی اور بالادستی کی سختی سے مخالفت کرتا ہے ۔چین تمام ممالک سے بنی نوع انسان کے ہم نصیب معاشرے کی مشترکہ تعمیر کی اپیل کرتا ہے۔

چین کے صدر مملکت شی چن پھنگ نے اس بات پر بھی زور دیا کہ فریقین کو ہر سطح پر تبادلے کو برقرار رکھنا چاہیے، دونوں ممالک کے سرکاری محکموں اور قانون ساز اداروں کے مابین تبادلے کو بڑھانا چاہئے اور باہمی سیاسی اعتماد میں اضافہ کرنا چاہئے۔ چین ہمیشہ مائکرونیشیا کے اپنے قومی حالات کے مطابق ترقیاتی راستے کے احترام ، قومی آزادی کے تحفظ اور ملک کی ترقی کے فروغ کے لئے اس کی کوششوں کی حمایت کرتا ہے۔ فریقین کو “دی بیلٹ اینڈ روڈ ” انیشییٹو “کے فریم ورک کے تحت تجارت ،سرمایہ کاری ، زراعت ، ماہی گیری ، بنیادی تنصیبات کی تعمیر اور سیاحت سمیت مختلف شعبوں میں باہمی تعاون کو بڑھانا چاہئے۔ اس کے علاوہ چین مائکرونیشیا کی طرف سے مچھلی ٹونا جیسی مصنوعات کی درآمد کا بھی خیرمقدم کرتا ہے۔ جزائر ممالک کے ساتھ تعاون اور ان ممالک کی ترقی کے لئے چین کی جانب سے پیش کردہ پالیسیوں اور اقدامات کا بھرپور استعمال کیا جائے تاکہ دونوں ممالک کے درمیان حقیقی تعاون پر عمل درآمد کیا جائے ۔ شی جن پھنگ نے مزید کہا کہ چین اپنی استطاعت کے تحت مائکرونیشیا کو معاشی اور تکنیکی مدد فراہم کرنے کا خواہاں ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں