بھارتی اداکار نواز الدین صدیقی فلم کی شوٹنگ کے دوران پاکستان کا کونسا گانا مسلسل سنتے تھے ؟

ممبئی(مانیٹرنگ ڈیسک) بالی ووڈ اداکار نواز الدین صدیقی ایک لمبے عرصہ سے بالی ووڈ سے منسلک رہے لیکن انہیں شہرت پاکستانی رپورٹر ” چاند نواب “ کا کردار فلم میں ادا کرنے کے بعد ہی ملی جس نے ان کے کیریئر کو چار چاند لگا دیئے تاہم اب انہوں نے انکشاف کیا ہے کہ وہ پاکستانی گلوکارہ مومنہ مستحسن کی جادوئی آواز کے بھی دیوانے نکلے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق نواز الدین صدیقی بالی ووڈ ادا کار سلمان خان کے بھائی ارباز خان کے پروگرام میں شریک ہوئے جہاں انہوں نے اپنے دل کی باتیں کھول کر رکھ دیں ۔انہوں نے بتایا کہ فلم ” منٹو“ کی شوٹنگ کے دوران وہ پاکستانی گلوکارہ مومنہ مستحسن کا گانا ” تیر ا وہ پیار “ مسلسل سنتے تھے اور یہ گاناسننے کے بعد ہی وہ فلم کے سارے سین شوٹ کرتے تھے ۔نوازالدین صدیقی نے کہا کہ جب بھی کوئی سین کرنے جاتا تھا تو ایک بار مومنہ مستحسن کا گانا سنا کرتا،

اس گانے کا کوئی مقابل نہیں تھا اور یہ گانا سننے کے بعد میں اپنے ہی خیالوں میں گم ہوجاتا تھا۔یاد رہے کہ یہ گانا مومنہ مستحسن اور گلوکار عاصم اظہر نے کوک سٹوڈیو میں گایا تھا جسے مداحوں کی جانب سے بے شمار پسند کیا گیا تھا ۔ نواز الدین صدیقی کی ویڈیو انسٹا گرام پر اس گانے کے ڈائریکٹر ” شجاع حیدر “ کی جانب سے جاری کی گئی

جس کے ساتھ انہوں نے پیغام درج کیا کہ ” موسیقی کی کوئی حدود نہیں ہوتیں ۔”مومنہ مستحسن کے ساتھ یہ گانا گانے والے گلوکار عاصم اظہر بھی میدان میں آئے آئے اور انہوں نے کمنٹ کرتے ہوئے لکھا کہ ” یہ بہت ہی حیران کن ہے ، موسیقی محبت اور امن کا پل ہے جو کہ بہت ضروری ہے ۔“

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں