چین تجارتی کشمکش میں اضافے کی بھرپور مخالفت کرتا ہے، چینی وزارتِ تجارت

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک):انتیس اگست کو چین کی وزارت تجارت کے ترجمان کاؤ فنگ نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ امریکہ کی طرف سے جاری شدید تجارتی کشمکش کے ردِ عمل میں چین کے جوابی اقدامات کافی ہیں۔چین تجارتی کشمکش میں اضافے کی بھرپورمخالفت کرتا ہے اور پر امن انداز میں مشاورت اور تعاون کے ذریعے اس مسئلے کو حل کرنے کے لیے تیار ہے۔ تاہم ، موجودہ صورتحال کے تناظر میں چین کا خیال ہے کہ اس وقت فوری توجہ طلب مسئلہ چین کی پانچ کھرب پچاس ارب امریکی ڈالر مالیت کی مصنوعات پر مزید ٹیرف لگانے کے اقدام کو منسوخ کرنا ہے تاکہ تجارتی کشمکش کو مزید بڑھنے سے روکا جائے۔ انہوں نے کہا کہ چین اس سلسلے میں امریکہ کے ساتھ رابطے میں ہے۔ چین نے بار بار اس بات پر زور دیا ہے کہ تجارتی کشمکش میں اضافہ ناصرف چین، امریکہ اور پوری دنیا کے عوام کے لیے نقصان دہ ہے بلکہ یہ دنیا کے لیے تباہ کن نتائج کا باعث بھی بن سکتا ہے۔کاؤ فنگ نے مزید کہا کہ چین امریکہ تجارتی وفود کے مابین مؤثر رابطہ برقرار ہے۔ انہوں نے کہا کہ ستمبر میں چینی تجارتی وفد کے امریکہ جا کر مذاکرات کرنے کا معاملہ فریقین کے درمیان زیرِ بحث ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں