چین میں ٹیکس اور فیس میں کمی کے فوائد بتدریج نظر آرہے ہیں

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک )سترہ اکتوبر کو بیجنگ میں چین کی وزارت خزانہ کے اہلکار شو گو چھیأو نے بیان میں کہا کہ رواں سال ٹیکس اور فیس میں کمی کے لئے اقدامات پر بھرپور عمل درآمد کیا گیا ہے جس سے مارکیٹ انٹیٹی کی قوت متحرکہ کی حوصلہ افزائی ہوئی ہے، نیز مارکیٹ کے اعتماد اور اقتصادی اضافے کی قوت کو مستحکم کیا گیا ہے۔

اعداد و شمار کے مطابق رواں سال پہلے آٹھ مہینوں میں چین میں ٹیکس اور فیس میں پندرہ کھرب یوان کی کمی آئی ہے۔ ٹیکس اور فیس میں کمی کرنا رواں سال میں چین کی مثبت مالی پالیسی کا سب سے اہم کام ہے۔ اس حوالے سے ایک تسلسل کے ساتھ اقدامات عمل میں لائے جا رہے ہیں۔

شو گو چھیاؤ نے کہا کہ رواں سال کی سرکاری ورکنگ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ٹیکس اور فیس کی کمی کے ذریعے صنعتی و کاروباری اداروں کے ٹیکس اور سماجی انشورنس کی ادائیگی میں تقریباً بیس کھرب یوان کی کمی لائی جائے گی۔ موجودہ صورتحال کے تناظر میں دیکھا جائے تو رواں سال ٹیکس اور فیس میں توقع سے زیادہ کمی ہو سکتی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں