چین کی قومی عوامی کانگریس کے تبتی وفد کا دورہ یورپی پارلیمنٹ

تبت خود اختیار علاقے کی عوامی کانگریس کی مجلس قائمہ کے نائب سربراہ نیما ٹیسرنگ کی قیادت میں چین کی قومی عوامی کانگریس کے تبتی وفد نے تیرہ سے پندرہ اکتوبر تک یورپی پارلیمنٹ کا دورہ کیا، دورے کے دوران وفد نے یورپی پارلیمنٹ کے متعدد اراکین سے ملاقاتیں کیں اور مقامی تھنک ٹینک سے تبادلہ خیال کیا۔

نیما ٹیسرنگ نے تبت کے حوالے سے چین کی مرکزی حکومت کی پالیسی، عوامی کانگریس کے نظام اور تبت میں قومیتی خود اختیاری نظام کی کامیابیوں پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے کہا کہ رواں سال تبت میں جمہوری اصلاحات پر عملدرآمد کا ساٹھواں سال ہے۔ چینی مرکزی حکومت اور پورے ملک کے عوام کی مضبوط حمایت کے ساتھ ساتھ تبت میں مختلف قومیتوں کے عوام کی مشترکہ کوششوں سے صرف چند دہائیوں میں تبت میں بے حد ترقی اور خوشحالی ہوئی ہے۔ سماجی نظام میں تاریخی کامیابیاں حاصل کی گئی ہیں اور سماجی زندگی میں زمین آسمان کا فرق آیا ہے۔

نیما ٹیسرنگ نے واضح طور پر کہا کہ تبت سے متعلق مسائل چین کے کلیدی مفادات اور ایک ارب چالیس کروڑ چینی عوام کے قومی جذبے سے قریبی تعلق رکھتے ہیں۔ امید ہے کہ یورپی یونین چین کے کلیدی مفادات اور اہم تحفظات کا احترام کرے گی، تبت سے متعلق مسائل سے احتیاط سے نمٹے گی اور چین کے ساتھ مل کر چین – یورپ تعلقات کی مثبت اور مستحکم ترقی کا مشترکہ طور پر تحفظ کیا جائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں