0

چین پاکستان کو کرونا ویکسین کی کھیپ مفت فراہم کرے گا

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) چین نے پاکستان کو کورونا ویکسین کا ایک بیچ مفت فراہم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں ممالک طویل عرصے سے وبا پر قابو پانے کے لیے مل کر کام کر رہے ہیں۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق چین کی وزارت خارجہ کی ترجمان ہوا چونئنگ نے میڈیا بریفنگ کے دوران ایک سوال کے جواب میں بتایا کہ چینی حکومت نے اپنے پاکستانی بھائیوں اور بہنوں کے لیے کوویڈ 19 ویکسین کی ایک کھیپ بطور تحفہ فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ہوا جونئنگ نے مزید بتایا کہ پاکستان کو کورونا ویکسین برآمد کرنے کے لیے تیز رفتار منصوبہ تیار کر رہے ہیں تاہم انہوں نے یہ نہیں بتایا کہ ویکسین کی کتنی مقدار بھیجی جائے گی اور وہ ویکسین کون سی ہوگی۔

گزشتہ روز پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی اسی حوالے سے اپنے چینی ہم منصب کے ساتھ ٹیلی فون پر گفتگو ہوئی تھی جس کے بعد پاکستان کے وزیر خارجہ نے اعلان کیا تھا کہ چین نے 31 جنوری تک پاکستان کو کورونا ویکسین کی 5 لاکھ خوراکیں بطور تحفہ دینے کا وعدہ کیا ہے۔

اپنی ٹویٹ میں شاہ محمود قریشی نے امکان ظاہر کیا تھا کہ پاکستان کو فراہم کی جانے والی کورونا ویکسین چینی کمپنی سائنو فارم کی ہوگی۔ گزشتہ ماہ ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان (ڈریپ) نے بھی سائنو فارم کی کورونا ویکسین ہی ملک میں ہنگامی استعمال کے لیے منظور کی تھا۔


یاد رہے کہ گزتہ برس کے اختتام پر وفاقی وزیر منصوبہ بندی و ترقیات اسد عمر کی زیر صدارت کوویڈ 19 ویکسین کی خریداری کے لیے خصوصی کابینہ کمیٹی نے سینوفارم سے ویکسین کی 1.1 ملین خوراک خریدنے کا فیصلہ کیا تھا۔

خیال رہے کہ پاکستان میں چائنا نیشنل بائیوٹیک گروپ (سی این بی جی) اور سینوواک بایوٹیک لمیٹڈ کی تیار کردہ ویکسینوں کے آخری مرحلے کے ٹرائلز اب بھی پاکستان میں جاری ہیں۔

واضح رہے کہ چین کی کورونا کے بعد ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان (ڈریپ) نے گزشتہ ہفتے آکسفورڈ یونیورسٹی اور آسٹرا زینیکا کی مشترکہ طور پر تیار کردہ کورونا ویکسین کی بھی منظوری دیدی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں