0

بھارتی کسانوں کا احتجاج جاری، ٹریکٹر مارچ کی تیاریاں، پولیس کی چھٹیاں منسوخ

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں کسانوں کا احتجاج جاری ہے، مودی سرکار نے بڑے پیمانے پر مظاہروں کے خطرے کے باعث ہریانہ پولیس کی چھٹیاں منسوخ کر دیں، 26 جنوری کو دلی کی طرف ٹریکٹر مارچ کی تیاریاں بھی آخری مراحل میں داخل ہوگئیں۔

کسانوں کے احتجاج نے مودی سرکار کے ہوش اڑا دیئے، خوف کا شکار حکومت نے ہریانہ پولیس کی چھٹیاں منسوخ کر دیں۔ دلی جانے کے لیے ہریانہ، راجستھان اور پنجاب سمیت متعدد ریاستوں سے کاشتکاروں نے تیاریاں مکمل کرلیں۔

کسانوں نے 26 جنوری کو بھارت کے نام نہاد یوم ِجمہوریہ پر ٹریکٹر مارچ کا اعلان کر رکھا ہے۔ کسان رہنماؤں کا کہنا ہے کہ متنازعہ قوانین کو کسی بھی صورت قبول نہیں کریں گے۔

مظاہرین کا کہنا ہے کہ مودی سرکار کو ٹف ٹائم دینے کے پوری تیاریاں کر لی گئی ہیں، تحریک کے جھنڈوں کی بھی بڑے پیمانے پر تیاری جاری ہے۔
بھارتی کسان 26 نومبر سے مسلسل متنازعہ زرعی قوانین کے خلاف احتجاج کر رہے ہیں۔ مظاہروں کے دوران اب تک 70 سے زائد کسان اپنی جانیں دے چکے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں