پہلا ٹیسٹ ،پاکستان آج 137رنزسے اپنی باری آگے بڑھائے گا

اسلام آباد(نیوزڈیسک) پاکستان ٹیم کے باﺅلرز کی عمدہ باﺅلنگ کی بدولت میزبان ٹیم گرین شرٹس کی اننگز کے جواب میں اپنی پہلی اننگز میں 107 رنز کے خسارے کے ساتھ 219 رنز بناکر آﺅٹ ہوگئی، اولی پوپ نے 62 رنز بنائے، یاسر شاہ نے چار، محمد عباس اور شاداب خان نے دو، دو جبکہ شاہین شاہ آفریدی اور نسیم شاہ نے ایک ایک وکٹ لی، پاکستان ٹیم نے میچ کے تیسرے روز کھیل ختم ہونے تک اپنی دوسری اننگز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 137 رنز بناکر انگلینڈ کے خلاف 244 رنز کی مجموعی برتری حاصل کرلی، سٹورٹ براڈ، کرس ووکس اور بین سٹوکس نے دو، دو کھلاڑیوں کو آﺅٹ کیا۔ مانچسٹر میں جمعہ کو میچ کے تیسرے روز انگلینڈ نے اپنی پہلی ادھوری اننگز 4 کھلاڑی آﺅٹ 92 رنز سے دوبارہ شروع کی تو اولی پوپ 46 اور جوز بٹلر 15 رنز پر کھیل رہے تھے۔ دونوں کھلاڑیوں نے کچھ مزاحمت کی اور پانچویں وکٹ پر 65 رنز بنائے، اولی پوپ اپنے گزشتہ روز کے انفرادی سکور میں 16 رنز کا اضافہ کرنے کے بعد نسیم شاہ کی گیند پر شاداب خان کے ہاتھوں کیچ آﺅٹ ہوگئے، انکے بعد جوز بٹلر کو 38 کے انفرادی سکور پر یاسر شاہ نے کلین بولڈ کر دیا۔ انکے بعد کوئی بھی انگش بلے باز پاکستانی باﺅلز کے سامنے نہ کھڑا ہوسکا، ڈوم بیس ایک رن بناکر یاسر شاہ کی گیند پر اسد شفیق کے ہاتھوں کیچ آﺅٹ ہوگئے، کرس ووکس انگلینڈ کے آٹھویں آﺅٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 19 رنز بناکر یاسر شاہ کی گیند کا نشانہ بنے۔ جوفرا آرچر 16 رنز بناکر شاداب خان کی گیند پر محمد رضوان کے ہاتھوں کیچ آﺅٹ ہوگئے،جیمز اینڈرسن انگلینڈ کے آخری آﺅٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 7 رنز بناکر شاداب خان کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آﺅٹ ہوگئے۔ سٹورٹ براڈ 29 رنز کے ساتھ ناٹ آﺅٹ رہے۔ انگلینڈ کی ٹیم گرین شرٹس کی اننگز کے سکور 326 رنز کے جواب میں اپنی پہلی اننگز میں 219 رنز بناکر آﺅٹ ہوگئی۔ پاکستان کے یاسر شاہ نے چار، محمد عباس اور شاداب خان نے دو، دو جبکہ شاہین شاہ آفریدی اور نسیم شاہ نے ایک ایک وکٹ لی۔ جواب میں 107 رنز کی برتری کے ساتھ پاکستان ٹیم کی طرف شان مسعود اور عابد علی نے دوسری اننگز کا آغاز کیا، آغاز کچھ خاص نہ تھا، پہلی اننگز میں شاندار سنچری سکور کرنے والے اوپننگ بلے باز دوسری اننگز میں بغیر کوئی رن بنائے سٹورٹ براڈ کی گیند پر جوز بٹلر کے ہاتھوں کیچ آﺅٹ ہوگئے، عابد علی 20، بابر اعظم 5 رنز بناکر پویلین لوٹ گئے، پہلی اننگز میں صفر پر آﺅٹ ہونے والے کپتان اظہر علی دوسری اننگز میں بھی کوئی خاطر خواہ کارکردگی کا مظاہرہ نہ کر سکے اور 18 رنز بناکر کرس ووکس کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آﺅٹ ہوگئے، اس وقت پاکستان کو مجموعی سکور 4 وکٹوں کے نقصان پر 66 رنز تھا ۔ اسد شفیق بدقسمتی سے 29 رنز بناکر رن آﺅٹ ہوگئے، محمد رضوان چھٹے آﺅٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 27 رنز بناکر بین سٹوکس کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آﺅٹ ہوگئے۔ شاداب 15رنز بناکر براڈ کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہوگئے، شاہین آفریدی 2 رنز بناکر بین سٹوکس کی گیند پر برنز کے ہاتھوں کیچ آﺅٹ ہوئے۔ میچ کے تیسرے روز جب کھیل ختم ہوا تو پاکستان نے اپنی دوسری اننگز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 137رنز بنالئے تھے اور اس کو انگلینڈ کے خلاف 244 رنز کی مجموعی برتری حاصل ہوگئی تھی۔ یاسر شاہ 12 رنز کے ساتھ ناٹ آﺅٹ تھے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں