“دیکھو ماں مجھے لینے آئی ہے۔۔۔!!!”انتقال سے قبل عرفان خان کی جانب سے ادا کیے گئے آخری الفاظ کیا تھے؟ آنکھیں نم کر دینے والی خبر آگئی

ممبئی (ویب ڈیسک) وہ آخری الفاظ جنہیں ادا کرنے کے بعد عرفان خان انتقال کر گئے، مرحوم نے اپنی اہلیہ سے کہا کہ “دیکھو ماں مجھے لینے آئی ہے “، کچھ روز قبل ہی والدہ کا انتقال ہوا تھا۔ تفصیلات کے مطابق بھارت کے مایہ ناز مسلمان اداکار عرفان خان کے انتقال کر جانے کے بعد بھارتی ذرائع ابلاغ کا بتانا ہے کہ مرحوم والدہ کےانتقال کے باعث شدید غم میں مبتلا تھے۔بتایا گیا ہے کہ عرفان خان اپنی والدہ کے انتقال اور ان کے جنازے میں شرکت نہ کر پانے کی وجہ سے بہت زیادہ غم زدہ تھے اور پھر اسی دوران ان کے طبیعت بگڑ گئی۔ ہسپتال میں بدھ کی صبح عرفان خان نے اپنی اہلیہ کو بلایا اور کہا کہ دیکھو ماں آئی ہے، وہ میرے بستر پر بیٹھی ہے، مجھے لینے آئی ہے۔یہ باتیں سن کر اداکار کی اہلیہ خود پر قابو نہ رکھ سکیں اور زار و قطار رونے لگیں۔عرفان خان کی جانب سے ادا کیے گئے یہ ان کی زندگی کے آخری الفاظ تھے اور پھر اس کے بعد وہ انتقال کر گئے۔ بتایا گیا ہے 53 سالہ بالی وڈ اداکار عرفان خان کولون انفیکشن کے باعث انتقال کرگئے۔ عرفان خان کو گزشتہ روز ناسازطبیعت کے باعث انتہائی نگہداشت یونٹ میں داخل کرواگیا تھا۔ عرفان خان کے پسماندگان میں اہلیہ اور دو بیٹے ایان اور بابیل شامل ہیں۔عرفان خان میں2018 میں کینسر کی تشخیص ہوئی ، بعد ازاں وہ اپنا علاج کرانے کے لیے امریکا چلے گئے ۔انہوں نے ہندی میڈیم، لنچ باکس، پیکو سمیت متعدد بلاک بسٹر فلموں میں کام کیا۔ واضح رہے کہ عرفان کی والدہ تین روز قبل بھارتی ریاست راجستھان کے شہر جے پور میں انتقال کرگئیں تھیں ۔ ملک گیر لاک ڈاؤن ہونے کے باعث عرفان خان نے والدہ کے جنازے میں ویڈیو کانفرنس کال کے ذریعے شرکت کی تھی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں