0

بین الاقوامی پروازوں سے آنیوالوں کی کورونا ٹیسٹنگ پر غور کیا جا رہا ہے، ٹرمپ

اسلام آباد(نیو زڈیسک)امریکا کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ ان کی حکومت بعض بین الاقوامی پروازوں سے آنیوالوں کی کورونا ٹیسٹنگ پر غور کررہی ہے۔صدر ٹرمپ نے یہ بات واشنگٹن میں تقریب سے خطاب میں کہی، ان کا کہنا تھا کہ ایسے ممالک جو کورونا سے بہت زیادہ متاثر ہیں، ان سے آنیوالی پروازوں کے مسافروں کا کورونا ٹیسٹ کیا جاسکتا ہے۔امریکی صدر نے کہا کہ اب ان ممالک میں برازیل بھی شامل ہو رہاہے، اس معاملے میں ایئر لائنز سے بات کی جارہی ہے اور مستقبل قریب میں اس پر عمل کیا جاسکتا ہے۔انہوں نے بتایا کہ رواں سال کے آغاز میں چین سے آنیوالے مسافروں کی اسکریننگ بھی کی گئی تھی اور چند مسافروں کو قرنطینہ بھی کیا گیا تھا۔ایک سوال پر صدر ٹرمپ نے کہا کہ ویکسین کی تیاری کے لیے پیشرفت جاری ہے، انہیں یقین ہے کہ کورونا وباء ختم ہوجائے گی اور موسم خزاں میں یہ معتدل صورت میں واپس بھی آیا تو اس سے نمٹ لیا جائے گا، امریکی حکومت اس کے لیے بالکل تیار ہے۔دوسری جانب امریکا میں کورونا سے اموات میں اچانک تیزی سے اضافہ دیکھا جارہا ہے، اس وباء سے مزید ڈھائی ہزار افراد ہلاک ہوئے ہیں جس کے بعد مجموعی تعداد تقریبا 60 ہزار ہوگئی ہے، اموات کی یہ تعداد ویت نام جنگ میں مارے گئے امریکیوں سے بھی بڑھ گئی ہے۔امریکی نیشنل آرکائیو کے مطابق ویت نام جنگ میں 58 ہزار 220 امریکی مارے گئے تھے ، جبکہ امریکا میں کورونا وائرس سے بیماروں کی تعداد 10 لاکھ 35 ہزار سے بھی زائد ہوگئی ہے۔صدرٹرمپ کے مشیر ڈاکٹر فاوچی کہتے ہیں کہ لاک ڈاؤن ختم کیا تو وائرس کیخلاف جنگ میں امریکا کئی ہفتے پیچھے چلا جائے گا، موسم خزاں میں صورتحال بہت بری ہوسکتی ہے، کورونا وائرس کو عام زکام سے کئی گنازیادہ مہلک قراردیا گیا ہے۔واضح رہے کہ امریکا کے صدر ٹرمپ نے ایک روزپہلے پریس کانفرنس میں کہا تھا کہ ملک میں اموات کی تعداد میں کمی آ رہی ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں