جنید جمشید کی کونسی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے؟

اسلام آباد(نیو زڈیسک)معروف نعت خواں جنید جمشید کے ماضی میں دیے ایک انٹرویو کی ویڈیو سوشل میڈیا پر خوب وائر ل ہورہی ہے جس میں اُنہوں نے بچوں کی تربیت اور پرورش کے حوالے سے اپنا نقطۂ نظر بیان کیا ہے۔یہ انٹرویو اُنہوں نے پاکستان کی معروف اداکارہ و میزبان ثانیہ سعید کو دیا تھا۔ہارون کو جنید جمشید کی یاد ستانے لگی جنید جمشید نے اپنے انٹرویو میں کہا تھا کہ ’ہم اپنے بچپن میں شرارتی ضرور تھے لیکن بدتمیز نہیں تھے۔‘ اُن کا کہنا تھا کہ ’میری سوچ یہ ہے کہ اولاد شرارتی ہوجائے لیکن بدتمیز نہ ہو اور والدین کو اِس بات کا ضرور خیال رکھنا چاہیے کہ اُن کی اولاد کو چھوٹے بڑے کی تمیز ہو اور اولاد کو یہ معلوم ہو کہ اپنے والدین سے کس طرح بات کرنی ہے۔‘ مرحوم جنید جمشید کا اپنے انٹرویو میں کہنا تھا کہ ’ہم نے کبھی اپنے والدین کے آگے آواز اُونچی نہیں کی اور نا ہی ساری زندگی والد کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر بات کی۔‘انہوں نے کہا کہ ’ہماری تعلیمات میں ہے کہ والدین چاہے جس عُمر میں پہنچ جائیں وہ اپنی اولاد کو کِھلانے میں خوشی محسوس کرتے ہیں لیکن اگر ہم اپنی تعلیمات کو چھوڑ کر دوسروں کی ثقافت کو اپنائیں گے تو اِس سے ہمارا معاشرہ تباہ ہوجائے گا۔‘اُن کا کہنا تھا کہ ’میری ہمیشہ سے عادت ہے کہ میں کھانا اپنی والدہ کے ساتھ کھاتا ہوں اور شادی کے بعد میری اہلیہ نے بھی اِس میں میرا بہت ساتھ دیا وہ کبھی مجھے یہ نہیں کہتی کہ تُم اپنی والدہ کے ساتھ کھانا کیوں کھاتے ہو۔‘اپنی اہلیہ کے بارے میں بات کرتے ہوئے اُن کا کہنا تھا کہ ’میری بیوی عائشہ بہت بہادر اور صبر و تحمل والی خاتون ہیں اُنہوں نے ہر مشکل میں، ہر فیصلے میں میرا ساتھ دیا ہے۔‘جنید جمشید کا کہنا تھا کہ ’میری والدہ اور میری اہلیہ عائشہ کے آپس میں بہت ہی اچھے تعلقات ہیں، دونوں ایک دوسرے کے بغیر نہیں رہ سکتیں۔‘جنید جمشید کو بچھڑے 3 برس بیت گئےاُن کا مزید کہنا تھا کہ ’ہم نے یہ دیکھا ہے کہ والدین سے اچھائی اور بُرائی کا صِلہ آپ کو دُنیا میں ہی مل جاتا ہے اِس لیے میں اپنی اہلیہ سے کہتا ہوں کہ کبھی کوئی ایسی غلطی نہیں کرنا جس سے اللّہ ناراض ہو کیونکہ ہماری بھی اولاد ہے ۔‘واضح رہے کہ جنید جمشید کو دنیا سے رخصت ہوئے 3 سال ہوچکے ہیں، 7 دسمبر 2016ء کو جنید جمشید پی آئی اے کے طیارہ حادثے میں اِس دُنیا سے رخصت ہوگئے تھے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں