پنجاب میں دفعہ 144 نافظ کر دی گئی

لاہور(ویب ڈیسک) آئی جی پنجاب شعیب دستگیر کے دفعہ 144 میں ترمیم کر کے نئے احکامات جاری، مراسلہ سی سی پی او لاہور، سی پی اوز، آر پی اوز اور ڈی پی اوز کو بھجوا دیا ۔تفصیلات کےمطابق آئی جی پنجاب پولیس شعیب دستگیر کی جانب سے جاری کردہ احکامات کے مطابق تمام بازار، شاپنگ مالز،ریسٹورنٹس بند رہیں گے،بڑے ڈیپارٹمنٹل سٹورزاشیائے خور و نوش، فارمیسی والا حصہ اوپن رکھیں گے، تمام ڈیپارٹمنٹل سٹور اشیائے خور و نوش کیلئے استعمال ہونیوالی ٹرالی کو ڈس انفیکٹ کرینگے، ایل پی جی کی دکانیں اور فلنگ پلانٹس کھلے رہیں گے۔ مراسلے میں کہا گیا ہے کہ سماجی، مذہبی یا سیاسی ہجوم پر مکمل پابندی عائد ہے، پرائیویٹ گاڑی پرایک شخص سفر کرسکتا ہے، میڈیکل ایمرجنسی کی صورت میں دوافراد مریض کیساتھ جاسکتے ہیں،ایک خاندان کے2افراد انتہائی ضروری ادویات یا گراسری لینے جا سکتے ہیں، ریسٹورنٹس سے صرف ہوم ڈیلیوری کی اجازت دی گئی ہے، سیمنٹ بنانے والے پلانٹ اپنی کالونی میں رہنے والا سٹاف استعمال کرینگے جبکہ بینک میں انتہائی ضروری سٹاف کام کرے گا۔جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نےکہاہےکہ وزیراعظم احتساب اورشفافیت پرسمجھوتہ کرنےوالے نہیں، ملک وقوم کو نقصان پہنچانے والوں کےخلاف ایکشن ضرور ہوگا‘کچھ لوگ ہر وقت حکومت کے کاموں میں خامیاں تلاش کرتے رہتے ہیں‘اپوزیشن کی توجہ کورونا بحران پر نہیں وہ حکومت کو تنقید کا نشانہ بنا کر سیاست کر رہی ہے،فلاحی تنظیموں پر مشتمل پنجاب ڈویلپمنٹ نیٹ ورک صوبہ میں3لاکھ سے زائد غر یب خاندانوں کو راشن فراہم کر ےگا،ہماری پالیسی ہےکسی غر یب خاندان کو راشن دیتےوقت اس کےساتھ تصاویر نہیں بنائی جائیں گی،لاہورمیں ناکوں پرموجود پاک افواج،پولیس اور رینجرز سمیت دیگر اہلکاروں کو دوپہر کا کھانا کے ایف سی کی جانب سے دیا جائےگا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں