خبردار ہوشیار۔۔۔ کیا چین سے بھیجے گئے ماسک استعمال کرنے سے کرونا ہو سکتا ہے؟ تہلکہ خیز تفصیلات

اسلام آباد(ویب ڈیسک ) چین کے اسلام آباد میں قائم سفارتخانے نے این 95 ماسک کی کوالٹی سے متعلق الزامات کو جھوٹا قرار دیتے ہوئے یکسرمسترد کردیا ہے۔ چینی سفارتخانے کے ترجمان کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ چین کی جانب سے بھجوایا جانے والا سامان نہ صرف اعلیٰ معیار کا ہےبلکہ بھجوانے سے قبل اس کا مکمل معائنہ بھی کیا گیا ہے، کویڈ 19 سے نمٹنے کے لیے حکومت پاکستان کی حمایت کو سراہتے ہیں۔ہم نیوز کے مطابق چینی سفارتخانے اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ کورونا سے دنیا کو محفوظ رکھنے کے لیے اپنا بھرپور تعاون جاری رکھیں گے۔چینی سفارتخانے کے ترجمان کے مطابق چین کی حکومت اورکمپنیاں مدد کے لیے بھرپور طور پر کام کر رہی ہیں۔ ترجمان کے مطابق ہم بھرپور مدد بھی جاری رکھیں گے۔جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابقدنیا بھر میں کورونا کے خلاف جنگ جاری ہے جس کے دوران لاک ڈاؤن کی وجہ سے پروڈکشن کا عمل رکا ہوا ہے۔ دوسری جانب چین اس جنگ میں فاتح بن کر ابھرا ہے اور اب پوری دنیا کو کورونا کے خلاف جنگ کیلئے اسلحہ (طبی آلات) فراہم کر رہا ہے۔چینی حکام کا کہنا ہے کہ چین کی جانب سے یکم مارچ سےاب تک دنیا کے50ملکوں کوتقریباً4ارب ماسک فروخت کیے جاچکے ہیں۔ چین نےیکم مارچ سےاب تک 3کروڑ75لاکھ حفاظتی لباس دنیا کو فروخت کیے ہیں۔چینی حکام کے مطابق یکم مارچ سے اب تک 16 ہزار وینٹی لیٹرزدنیاکےمختلف ملکوں کوفروخت کیےگئے ہیں جبکہ دنیا بھر کومارچ سےاب تک 28 لاکھ کوروناٹیسٹنگ کٹس فروخت کی جاچکی ہیں۔ حکام کا کہنا ہے کہ چین کی دنیاکے 50 ملکوں کومیڈیکل ایکسپورٹ ایک ارب 4 کروڑ ڈالرز رہی۔دنیا بھر میں کورونا کے خلاف جنگ جاری ہے جس کے دوران لاک ڈاؤن کی وجہ سے پروڈکشن کا عمل رکا ہوا ہے۔ دوسری جانب چین اس جنگ میں فاتح بن کر ابھرا ہے اور اب پوری دنیا کو کورونا کے خلاف جنگ کیلئے اسلحہ (طبی آلات) فراہم کر رہا ہے۔چینی حکام کا کہنا ہے کہ چین کی جانب سے یکم مارچ سےاب تک دنیا کے50ملکوں کوتقریباً4ارب ماسک فروخت کیے جاچکے ہیں۔ چین نےیکم مارچ سےاب تک 3کروڑ75لاکھ حفاظتی لباس دنیا کو فروخت کیے ہیں۔چینی حکام کے مطابق یکم مارچ سے اب تک 16 ہزار وینٹی لیٹرزدنیاکےمختلف ملکوں کوفروخت کیےگئے ہیں جبکہ دنیا بھر کومارچ سےاب تک 28 لاکھ کوروناٹیسٹنگ کٹس فروخت کی جاچکی ہیں۔ حکام کا کہنا ہے کہ چین کی دنیاکے 50 ملکوں کومیڈیکل ایکسپورٹ ایک ارب 4 کروڑ ڈالرز رہی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں