ڈاکٹروں کیلئے بُری خبر!!! ایک ہفتہ ڈیوٹی دینے پر 2 ہفتے چھٹی کے اعلان پر بڑا یو ٹرن لے لیا

لاہور (ویب ڈیسک) محکمہ سپیشلائزڈ ہیلتھ نے کورونا وارڈز میں ڈیوٹی دینے والے ڈاکٹرز اور نرسز کو ایک ہفتہ ڈیوٹی دینے پر دو ہفتے کی رخصت کا اعلان واپس لے لیا۔ ٹیچنگ ہسپتالوں کی جانب سے فیصلے پراعتراض پر نیا نوٹیفکیشن جاری کردیا۔ محکمہ سپیشلائزڈ ہیلتھ کی جانب سے ہوم ورک مکمل کئےبغیر ہی4 روز قبل ٹیچنگ ہسپتالوں میں کورونا کے مریضوں کی دیکھ بھال پرمامور ڈاکٹرز ، نرسز اور عملے کی ڈیوٹی روزانہ چھ گھنٹے کرنے اور ایک ہفتہ ڈیوٹی دینے پر دو ہفتے کی رخصت دینے کا بڑا اعلان کیا گیا، تاہم ٹیچنگ ہسپتالوں کی جانب سے اب فیصلے کو ناقابل عمل قرار دیدیا گیا اور بتایا گیا کہ اس اقدام سے چند روز میں ہی ہیومن ریسورس کی شدید کمی کا سامنا کرنا پڑے گا اور6 گھنٹے کی ڈیوٹی دینے سے زیادہ ڈاکٹرز اور نرسز کو کورونا وارڈز میں مامور کیا جائے گا، جس سے ہسپتال کے ڈاکٹرز اور نرسز کو مرض لاحق ہونے کا خطرہ بھی بڑھ جائے گا۔ حقائق سامنے آنے پر محکمہ سپیشلائزڈ ہیلتھ نے چار روز بعد ہی ایک ہفتہ ڈیوٹی کرنے والوں کو دو ہفتے کی چھٹی دینے کا فیصلہ واپس لے لیا ہے، ابن کورونا وارڈ میں ڈیوٹی کا دورانیہ بھی ٹیچنگ ہسپتالوں کی انتظامیہ طے کرے گی اور یہ تمام تر معاملہ اب ٹیچنگ ہسپتالوں کی انتظامیہ کی صوابدید پر چھوڑ دیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں