0

بھارتی حکومت نے کشمیریوں کی 6ہزار ایکڑ زمین پرقبضہ کرلیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک کا کہنا ہے کہ بھارتی حکومت نےمقبوضہ کشمیرکی 6ہزارایکڑزمین پرقبضہ کرلیا ہے ، گلوبل انویسٹرکانفرنس میں کشمیریوں کی زمین نیلام کی جائےگی۔تفصیلات کے مطابق حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک نے اپنے بیان میں کہا کہ بھارتی حکومت نےمقبوضہ کشمیر کی 6ہزارایکڑزمین پرقبضہ کرلیا ہے اور یہ زمین ہندوپنڈتوں اورآرایس ایس کےغنڈوں کودی جارہی ہے۔مشعال ملک کا کہنا تھا کہ بھارت گلوبل انویسٹرکانفرنس کشمیرمیں کرانےجارہاہے، گلوبل انویسٹرکانفرنس میں کشمیریوں کی زمین نیلام کی جائےگی، بھارت کشمیرمیں آبادی کاتناسب تبدیل کرنےکی کوشش کررہاہے۔انھوں نے کہا کہ کشمیری اب بھی بھارتی ہتھکنڈوں کوناکام بنائیں گے اور مطالبہ کیا اقوام متحدہ اپنی قراردادوں پرعمل درآمد کرائے۔یاد رہے مودی سرکار کا مقبوضہ کشمیرکےعوام کواباؤاجدادکےعلاقےسےبیدخل کرنےکامنصوبہ بے نقاب ہوگیا تھا اور قابض بھارتی فوج نے مقبوضہ وادی کی چھ ہزار ایکڑاراضی ہتھیالی، جو ہندوپنڈتوں اورآر ایس ایس کے ورکرز کو دی جائے گی۔بھارت نے مقبوضہ کشمیر میں سرمایہ کاری کے نام پرکانفرنس کرانےکی تیاریاں کرلی ہے ، مقبوضہ کشمیر میں گلوبل انویسٹرز کانفرنس مارچ یااپریل میں کرائی جائے گی۔مقبوضہ کشمیر کے نائب گورنرجی سی مرمو کے مطابق صنعتی اور آئی ٹی پارکس بنیں گے اور فلم انڈسٹری،سیاحت،زراعت ودیگرصنعتوں کےنام پرزمینیں ہندوؤں کو دی جائیں گی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں