چینی 20روپے فی کلو تک سستی۔۔۔ عوام کی امنگوں کی ترجمانی کردی گئی

لاہور (نیوز ڈیسک) رہنما مسلم لیگ ن عطاء اللہ تارڑ نے دعویٰ کیا ہے کہ جہانگیر ترین ‘ خسروبختیار اور ہمایوں اختر کی شوگرملز میں موجود چینی مارکیٹ میں لے آئیں تو قیمت میں 20 روپے کمی ہو جائے گی ۔ تفصیلات کے مطابق رہنما مسلم لیگ ن عطاء اللہ تارڑ نے کہا ہے کہ حکومت اگر تین لوگوں کی شوگر ملز میں موجود چینی مارکیٹ میں لے آئیں تو چینی کی قیمت 48 گھنٹے میں کم ہو جائے گئی۔عطاء اللہ تارڑ کا کہنا ہے کہ45 فیصد شوگر انڈسٹری 3 لوگوں کے ہاتھ میں ہے۔دعوی کرتا ہوں کہ اگر جہانگیر ترین، خسرو بختیار اور ہمایوں اختر کی شوگر ملز میں پڑی چینی کو آج مارکیٹ میں لے آیا جاے تو دو دن میں چینی کی بوری بیس روپے سستی ہو جاے گی۔۔عطا اللہ تارڑواضح رہے چینی کی قیمتوں میں اضافے کے بعد اپوزیشن تحریک انصاف کے کچھ رہنماؤں پر اس کا الزام ٹھہرا رہی ہے۔ جس میں جہانگیر ترین ، خسرو بختیار اور ہمایوں اختر شامل ہیں۔ جس پر وزیراعظم عمران خان بھی ردعمل دے چکے ہیں ۔انھوں نے کہا کہ جہانگیر ترین کا حالیہ بحران میں کوئی ہاتھ نہیں ہے، گندم اور آٹا بحران کے ذمہ داروں کے خلاف جلد ایکشن لونگا۔وفاقی حکومت نے آٹا ، گھی ، چینی اور دالوں کی قیمتیں کم کر نے کا فیصلہ کرلیا ہے، وزیراعظم نے کہا کہ غریبوں کا احساس نہیں کرسکتے تو حکومت میں رہنے کا کوئی حق نہیں، ہرحال میں قیمتیں نیچے لاؤں گا، جو لوگ راشن نہیں خریدسکتے ان کو راشن پہنچائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت اعلیٰ سطحی اجلاس ہوا، اجلاس میں اشیائے خوردونوش کی سستے داموں فراہمی پر غور کیا گیا۔اجلاس میں مشیرخزانہ حفیظ شیخ، حماد اظہر، جہانگیرترین، علی زیدی ،شہباز گل، ثانیہ نشتراور چیئرمین یوٹیلٹی اسٹورز بھی شریک تھے۔ اجلاس میں حکومت نے آٹا ، گھی ، چینی اور دالوں کی قیمتیں کم کر نے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے مشیرخزانہ حفیظ شیخ کو ہدایت کی کہ کسی بھی چیزکا بجٹ کاٹیں لیکن ہم غریبوں کو سہولت دیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں