پاکستان اور چین کاڈالر پر انحصار ختم،مقامی کرنسیوں میں تجارت سے برآمدات اور زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافے سے معیشت کی بحالی کی نوید سنا دی گئی

لاہور(نیوز ڈیسک)چیئرمین ٹاؤن شپ انڈسٹریز ایسوسی ایشن عظم چوہدری نے پاکستان اور چین کی طرف سے ڈالر پر انحصار ختم کرنے کے فیصلہ پر وفاقی کابینہ کی طرف سے ایم او یو پر دستخط کرنے کی منظور ی کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہڈالر پر انحصار ختم کرکے پاک چین تجارت یوآن میں کرنے سے کاروباری سرگرمیوں میں اضافہ ہوگا اور ڈالر کی اجارہ داری کا خاتمہ کے ساتھ ڈالر کی قیمت کو کنٹرول کرکے کم کرنے میں مدد ملے گی اس فیصلہ سے دونوں ممالک کے درمیان مقامی کرنسی میں تجارت سے پاکستان کے ذرمبادلہ کےذخائر پر دباؤ کم ہوگا اور ملکی زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافہ کے ساتھ ملکی معیشت مستحکم ہوگی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سینئر وائس چیئرمین وسیم چاولہ، وائس چیئرمین انجینئر خرم کے ساتھ ٹاؤن شپ انڈسٹریز کے صنعتکاروں کے مختلف وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ اعظم چوہدری نے کہا کہ پاکستان اور چین نے مقامی کرنسی میں تجارت کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس کی کابینہ نے سرکولیشن کے ذریعے منظوری دے دی اب دونوں ممالک کے درمیان تجارت ڈالر کی بجائے یوآن میں ہوگی۔انہوں نے کہا کہ پاک چین آزاد تجارت کے معاہدے(سی پی ایف ٹی اے) کا دوسرا مرحلہ موثر عمل ہونے اور پاکستان کی 313مصنوعات کو ڈیوٹی فری رسائی کے بعد مقامی کرنسیوں میں تجارت سے پاکستانی برآمدات اور زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافہ سے ملکی معیشت کی بحالی میں مدد ملے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں