چوہدری پرویزالٰہی کے پاس میرا جو راز ہے وہ ۔۔۔ مولانا فضل الرحمٰن نے کچھ نہ بتاتے ہوئے بھی سب کچھ بتا دیا، حیران کن خبرآگئی

لاہور(ویب ڈیسک) جمعیت علماء اسلام (ف) کےسربراہ مولانا فضل الرحمان نےکہاہے کہ میرا کوئی راز چوہدری پرویز الہی کے پاس امانت نہیں ہے، اگر کوئی راز اُن کے پاس ہے تو وہ اُسے فاش کر دیں ،آزادی مارچ کے بعد حکومت کی عمارت میں دراڑیں پڑ چکی ہیں،ان کے اتحادی ناراض ہورہے ہیں،یہ ہمارے مارچ کے اثرات ہیں،ناکام حکومت کی وجہ سے ملک بحران کا شکار ہے،بڑی پارٹیوں نے ہمیں مایوس کیا ہے تاہم تحریک میں ہمار ے دروازے اُنکے لیے کھلے ہیں،اپوزیشن تقسیم ہو تو حکومت فائدہ اٹھاتی ہے ۔ تفصیلات کے مطابق مولانا فضل الرحمان نے مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے سربراہ سینیٹر علامہ ساجد میر سے ان کے دفتر راوی روڈ میں ملاقات کی،جس میں تحریک تحفظ آئین پاکستان کے آئندہ کے لائحہ عمل اور اسکے خدوخال پر تفصیلی تبادلہ خیال کیاگیا،بعدازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئےمولانا فضل الرحمان نے کہا کہ آزادی مارچ کے بعد حکومت کی عمارت میں دراڑیں پڑ چکی ہیں،ان کے اتحادی ناراض ہورہے ہیں،یہ ہمارے مارچ کے اثرات ہیں، اس وقت ملک میں حکومت کی کہیں کوئی رٹ نہیں ہے،جو قوتیں انہیں سلیکٹ کرکے لائی ہیں صرف اُن کی رٹ قائم ہے،ہم ایک بارپھر عوام کے پاس جارہے ہیں کیونکہ عوام اس وقت تنہا ہیں جو مہنگائی اور بے روزگاری کی وجہ سے پریشان ہیں،ناکام حکومت کی وجہ سے ملک بحران کا شکار ہے،بجلی،گیس اورپٹرول سمیت ہر چیز کی قیمتیں بڑھ رہی ہیں۔مولانافضل الرحمان نے کراچی میں جلسہ کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ 23 فروری کو کراچی میں بڑاجلسہ عام ہوگاجبکہ یکم مارچ کو اسلام آباد میں کنونشن کا انعقاد ہوگا، لاہور میں آج مشاورتی اجلاس ہوا،جس میں آئینی اور منتخب حکومت کے قیام کیلئے مشاورت ہوئی،اپوزیشن تقسیم ہو تو حکومت فائدہ اٹھاتی ہے،جو موقف پہلے تھا آج بھی اسی پر قائم ہیں،آج ملک میں مہنگائی کاراج ہے،اپوزیشن اپناکردارادا کررہی ہے،عوام کی مایوسی کوامیدکی کرن سے بدلنے کی کوشش کررہے ہیں۔ مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ آزادی مارچ میں سیاسی فیصلوں کا دخل ہے جس کے باعث نتائج آنے میں تاخیر ہوئی،سیاسی فیصلوں کی وجہ سے کچھ مشکلیں آئیں، بڑی پارٹیوں نے ہمیں مایوس کیا ہے تاہم تحریک میں ہمار ے دروازے ا نکے لیے کھلے ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں مولانا نے کہا کہ چوہدری پرویز الہی کے پاس میرے حوالے سے کوئی روز ہے تو انہیں ظاہر کردیں،آزادی مارچ میں مجھے کوئی یقین دہانی نہیں کرا ئی گئی، میرا کوئی راز چوہدری پرویز الہی کے پاس امانت نہیں ہے،وہ چاہیں تو انہیں فاش کرسکتے ہیں۔ فضل الرحمان نے کہا کہ حکومت نے عوام کا جینا دوبھر کردیا ہے،عام آدمی بجلی کے بلوں اور مہنگائی کی چکی میں پس چکی ہے، تحریک انصاف کی حکومت عوام سے کیا گیا ایک بھی وعدہ پورا نہیں کرسکی، آج لوگ حالات سے تنگ ہو کر خودکشیاں کررہے ہیں۔مولانا فضل الرحمان نے مزید کہا کہ بعض پالیسیوں کی وجہ سے اپوزیشن منقسم ہوئی۔ جے یو آئی (ف) اپنے موقف سے پیچھے نہیں ہٹی۔ عوام کو اب قومی وحدت کا مظاہرہ کرنا ہوگا۔سینیٹر علامہ ساجد میر نے مشاورتی اجلاس میں نئی تحریک کی کامیابی کے لیے بھرپور ساتھ دینے کی یقین دہانی کرائی اور کہا کہ ہماری جماعت اور اسکی ذیل تنظیمیں تمام پروگراموں میں شریک ہوں گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں