پاکستانیوں کے لئےافسوس ناک خبر مسلح تصادم کے نتیجے میں ایک جاں بحق چار شدید زخمی

اٹک(نیوز ڈیسک) زمین کے تنازع پر دو گروپوں کے درمیان ہونے والے مسلح تصادم کے نتیجے میں ایک شخص جاں بحق اور چار شدید زخمی ہوگئے ہیں جنہیں فوری طبی امداد کےلئے ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔ جائے وقوع پر پولیس کی بھاری نفری موجود ہے۔
مسلح تصادم کے نتیجے میں جاں بحق ہونے والے صداقت خان کے لواحقین نے نعش کو ایبٹ آباد چوک میں رکھ کر احتجاج کرنا شروع کردیا ہے جس کی وجہ سے جی ٹی روڈ پر ٹریفک معطل ہوگیا ہے۔ جاں بحق ہونے والے صداقت خان کے لواحقین کا الزام ہے کہ قاتلوں کو پیسے لے کر جائے وقوع سے فرار کرا دیا گیا ہے۔اطلاعات کے مطابق اٹک کے علاقے خورہ غرشین میں زمین کے تنازع پر دو گروپوں میں مسلح تصادم ہوا تو ہونے والی فائرنگ کے باعث صداقت خان موقع پر جاں بحق ہو گیا۔موصولہ اطلاعات کے مطابق پولیس فائرنگ ہونے پر جائے وقوع پہ پہنچی اور اس نے نعش تحویل میں لے کر پوسٹ مارٹم کےلئے حسن ابدال ہسپتال منتقل کی۔غرشین میں ہونے والا قتل احتجاج کی صورت اختیار کرگیا ہے کیونکہ ورثا پولیس کے رویے اور پوسٹ مارٹم میں تاخیرکا الزام عائد کرکے جائے وقوع پر احتجاج کررہے ہیں۔ اس احتجاج کے سبب راولپنڈی، پشاور اور ایبٹ آباد جانے والی شاہراہوں پہ ٹریفک کی روانی شدید متاثرہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں