میشا شفیع کو تین بار ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ گلوکارہ کے شوہر کے بھری عدالت میں حیران کن انکشافات

لاہور(ویب ڈیسک) میشاء شفیع کے خلاف گلوکارو اداکار علی ظفر کے ہرجانہ کیس کی سماعت 13 فروری تک ملتوی کر دی گئی، عدالت کے روبرو میشا شفیع کے شوہر نے بیان قلمبند کرا دیا، عدالت نے مزید گواہوں کو بیان قلمبند کرانے کے لئے طلب کر لیا۔ ایڈیشنل سیشن جج امجد علی شاہ نے سماعت کی،میشاء شفیع کے شوہر محمود الرحمن نے عدالت میں اپنا بیان قلمبند کراتے ہوئے کہا میں ان الزامات کو رد کرتا ہوں کہ میشاء شفیع شہرت کیلئے عوام کے پاس گئیں، میشاء شفیع کے ساتھ جب دوسری بار ہراسگی کا واقعہ پیش آیا تب میں موجود نہیں تھا، پہلی بار ہراسگی کا واقعہ پیش آنے پرمیشاء شفیع نے علی ظفر کی فیملی سے ملنے سے انکار کیا، تیسری بار ہراسگی کے واقعہ کے وقت میں اپنی آنکھوں کے علاج کیلئے ہسپتال میں تھا، میشا شفیع نے بتایا کہ اب علی ظفر کے ساتھ کام نہیں کر سکتی، علی ظفر نے مجھے اپنے گھر میں ریہرسل کے دوران ہراساں کیا، عدالت نے سماعت 13 فروری تک ملتوی کرتے ہوئے مزید گواہوں کو بیان قلمبندکرانے کیلئے طلب کر لیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں