حکومت کا ’بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام‘ کا نام تبدیل کرنے کا فیصلہ، نیا نام کیا ہوگا؟ پاکستانیوں کے لیے یقین کرنا مشکل

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) حکومت کا ’بینظیر انکم سپورٹ پروگرام‘ کا نام تبدیل کرنے کا فیصلہ، نام ’احساس کفالت پروگرام‘ رکھا جائیگا، کارڈ پر محترمہ بے نظیربھٹوکی جگہ قائداعظم کی تصویر ہوگی، افتتاح وزیراعظم 31 جنوری کو کرینگے۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت نے ’بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام‘ کا نام تبدیل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔پروگرام کا نام ’احساس کفالت پروگرام‘ رکھا جائیگا۔ اس کا افتتاح وزیراعظم عمران خان 31 جنوری کو کرینگے۔ اس حوالے سے یہ بھی فیصلہ کیا گیا ہے کہ اس پروگرام کے کارڈ پر محترمہ بے نظیر بھٹو کی جگہ قائداعظم محمد علی جناح کی تصویر ہوگی۔ وزیراعظم عمران خان کی معاون خصوصی ڈاکٹر ثانیہ نشتر کا کہنا ہے کہ احساس کفالت پروگرام کے تحت مستحق افراد کو ہر ماہ کے پہلے ہفتے میں رقم کی ادائیگی کر دی جائیگی۔تمام مستحقین کو ہرماہ دو ہزار روپے کی امداد کی جائیگی۔ اس پروگرام کے ہدف ک تحت 70 لاکھ افراد کو شامل کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ڈاکٹر ثانیہ نشتر کا کہنا ہے کہ بے نظیر انکم سپورٹ کے 50 لاکھ مستحق افراد کو اس پروگرام میں شامل کیا جائیگا۔ انھوں نے مزید بتایا کہ اس وقت 70 اضلاع کے 10 لاکھ مستحق افراد کو پروگرام میں شامل کر لیا گیا ہے۔ اس پروگرام کی تیاری کے لیے معاون خصوصی سماجی تحفظ و تخفیف غربت ڈاکٹر ثانیہ نشتر ایک بہت بڑا قدم اٹھایا تھا۔انھوں نے ادائیگیوں کو شفاف رکھنے کے لیے ادائیگی کو بنکوں کے ذریعے سے ادا کرنے کا فیصلہ کیا تھا جس کے لیے ڈیجیٹل نظام لانے کا فیصلہ کیا گیا تھا۔ غربت کی لکیر سے نیچے زنگی گزارنے والوں کیلے امدادی پیکج کی تیاریاں مکمل کرلی گئیں تھیں ۔ کفالت پروگرام سے 70 لاکھ افراد مستفید ہونے کا عندیہ دیا گیا تھا،مستحق افراد تک احساس کفالت کارڈ کی ترسیل پاکستان پوسٹ کے ذریعے کی جائیگی۔ اب اس حوالےسے یہ خبر سامنے آئی ہے کہ بے نظیرانکم سپورٹ کو ختم کردیا گیا ہے اور اسکی جگہ ’احساس کفالت پروگرام‘ کو لایا جائیگا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں